سحری اورافطاری کا غذائی چارٹ

fasting foods

جیسا کہ ماہ رمضان کا مہینہ شروع ہو چکا ہے۔ سحری کے وقت یہ بات ذہن میں ہوتی ہے کہ کیا کھائے جائے کہ سارا دن آرام سے گزر جائے اور جب سارا دن بھوکے پیٹ رہ کر افطار کاوقت ہوتا ہے تو یہ سوچ ہوتی ہے کہ کون سی غذائیں کھائی جائیں جس سے توانائی بھی پوری ہو جائے اور معدے پر بوجھ بھی نہ پڑے۔ذیل میں ایسی غذائیں بتائی جا رہی ہیں جس سے آپ کو فائدہ ہو گا۔

دودھ  میوے اور جو کا دلیہ: سحری میں جو کے دلیے میں دودھ اور میوہ ملا کر کھانا بہت فائدہ مند ہے۔

دہی کا استعمال: سحری میں دہی کا استعمال بھی معدے کو فائدہ پہنچاتا ہے اور گرمی کے روزوں میں اس کا استعمال صحت کے لیے ضروری ہے۔

چکی کے آٹے کی روٹی اور گوشت:سحری میں گھی میں ڈوبے ہوئے پراٹھے  کھانے سے بہتر ہے کہ چکی کے آٹے کی روٹی کھائی جائے اس سے جلد بھوک کا احساس بھی نہیں ہوتا اور وزن بڑھنے کا ڈر بھی نہیں رہتا۔

اس کے ساتھ ساتھ بھنی ہوئی مرغی، گائے یا بکرے کے گوشت کا استعمال بھی کیا جا سکتا ہے۔

افطاری میں صحت افزا غذائیں

کھجور اور پانی کا استعمال: روزہ کھولتے وقت پانی یا کھجور استعمال کریں لیکن زیادہ بہتر یہ ہے کہ روزہ کھجور سے افطار کیا جائے۔

دودھ اور تازہ جوس: افطار کے وقت دودھ یا دودھ کا شربت اور پھلوں کے تازہ جوس پینا جسم کو تقویت دیتے ہیں۔

چنے، آلو اور چنوں کی چاٹ: افطاری میں ہلکے مصالحے دار چنے یا آلو اور چنوں کی چاٹ اور دہی بڑوں کا استعمال بھی فائدہ مند ہیں جبکہ رات کے کھانے میں بھی کم مصالحے والے سالن یا چاول کا  اہتمام  کیا جانا چاہیئے۔

تلی ہوئی چیزوں سے اجنتاب کریں افطار میں اگر سموسے اور پکوڑے نہ ہوں تو اسے ادھورا تصور کیا جاتا ہے اور یہی کولیسٹرول میں اضافے اور صحت کی خرابی کا باعث بنتی ہیں، اسی لیے رمضان میں ان سے اجتناب کرنا چایئے کیونکہ تمام دن کے بعد معدے کو متوازن اور صحت مند غذا کی ضرورت ہوتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.