صاف اورشفاف الیکشن کے انعقاد کیلئے پہلی بار خواجہ سرا بھی میدان میں

khawja sara

کراچی (خصوصی رپورٹ) پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار خواجہ سرا بھی الیکشن 2018ء کی مانیٹرنگ کریں گے ۔ تفصیلات کے مطابق دیگر اداروں کی طرح اس بار خواجہ سرا بھی انتخابات کی مانیٹرنگ کے لیے اپنی خدمات پیش کرینگے ،اس حوالے سے انہیں خصوصی تربیت فراہم کی جارہی ہے ۔ الیکشن کمیشن کی جانب سے الیکشن مانیٹرنگ کے لیے جینڈر ایکیوٹی الائنس (جیا فاؤنڈیشن)سے تعلق رکھنے والے 125 خواجہ سراؤں کو منتخب کر لیا گیا ہے ،جن میں سے 25 خواجہ سرا کراچی کے علاوہ اندرون سند ھ کے تمام پولنگ بوتھ کا دورہ اور الیکشن کمیشن کو دھاندلی یا کرپشن سے متعلق اپنی رپورٹ پیش کرینگے ۔

اس حوالے سے تربیت کے لیے خواجہ سراؤں کی کارنر میٹنگز کا آغاز بھی ہو گیا ہے جو کہ رات گئے تک جاری رہتی ہیں۔جینڈر ایکیوٹی الائنس (جیا فاؤنڈیشن)کی صدر اور سندھ کی فوکل پرسن بندیا رانا نے اس بارے میں تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ ہما را کسی سیاسی پارٹی سے تعلق نہیں،ہم جو بھی رپورٹ تیار کریں گے وہ انصاف پر مبنی ہوگی،تمام خواجہ سرا اس کام کے لیے بہت خوش اور الیکشن کمیشن کے شکر گزار ہیں۔ بندیا کا کہنا تھا کہ اس کام کے لیے 125 پڑھے لکھے خوا جہ سراؤں کا انتخاب کیا گیا ہے ، جو اپنی خدمات پیش کرنے پر انتہائی پر جوش اور پر عزم ہیں،یہ اچھا اقدام ہے، انتخابات 2018 ء میں خواجہ سراؤں کی ایک بڑی تعداد حصہ لے رہی ہے جو کہ خوش آئند بات ہے ۔

Author: admin

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.