پاکستان کے یوم آزادی کی مناسبت سے پاکستانی بلڈ ڈونرز ایسوسی ایشن اور اسلامک ایجوکیشن کمیٹی (یوتھ ونگ) کے زیر اہتمام بلڈ ڈونیشن کا انعقاد

پاکستانی بلڈ ڈونرز ایسوسی ایشن

(محمد عرفان شفیق۔ کویت۔ٹاپ نیوزاردو) کویت بلڈ بنک کی درخواست پر پاکستان کے 74ویں یوم آزادی کی مناسبت سے پاکستانی بلڈ ڈونرز ایسوسی ایشن اور اسلامک ایجوکیشن کمیٹی (یوتھ ونگ) کے زیر اہتمام ہنگامی بلڈ ڈونیشن کا انعقاد، انسانیت کی خدمت کے جذبے سے کیا گیا، جس میں پاکستانی کمیونٹی کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ حالیہ کرونا وباء کی وجہ سے کویت میں خون کی کمی کی بدولت کویت کے مرکزی بلڈ بنک کی درخواست پر پاک ڈونرز اور اسلامک ایجوکیشن کمیٹی (یوتھ ونگ) کے زیر اہتمام بلڈ ڈونیشن کے انعقاد کیا گیا۔ اسکے ساتھ ساتھ بلڈ ڈونیشن کے انعقاد کا مقصدان تمام افراد کو بھی خراج تحسین پیش کرنا تھا جنہوں نے آزادی کے حصول میں اپنی جانوں کے نذرانے پیش کیے۔


بلڈ ڈونیشن کا انعقاد العدان ہسپتال کے وسیع و عریض بلڈ بنک میں کیا جس جو بلا تعطل دوپہر 1 بجے سے شام 7 بجے تک جاری رہا۔ کویت میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کی ایک کثیر تعداد نے بلڈ ڈونیشن کیمپ میں بھرپور شرکت کی جس کی بدولت 6 گھنٹوں کے قلیل عرصے میں 251 افراد نے اپنے خون کا نذرانہ پیش کیا۔ عطیہ خون کے دوران وزارت صحت کی جانب سے کرونا وباء کے پیش نظر تمام ہدایات کو ملحوظ خاطر رکھا گیا۔

بلڈ ڈونیشن کیمپ کا انعقاد پاکستانی بلڈ ڈونرز ایسوسی ایشن، اسلامک ایجوکیشن کمیٹی (یوتھ ونگ) اور بلڈ بنک کے تعاون سے کیا گیا۔ کویت میں اسلامی جمہوریہ پاکستان کے سفیر سید سجاد حیدر نے خصوصی طور پر شرکت کی۔ پاکستانی بلڈ ڈونرز ایسوسی ایشن کا قیام 2011 میں عمل میں آیا تھا، جو کہ کویت میں پاکستانی کمیونٹی کی عطیہ خون کے حوالے سے اپنی نوعیت کی پہلی تنظیم ہے جسکا مقصد عطیہ خون کے حوالے سے کمیونٹی کے افراد میں آگاہی کو فروغ دینا ہے۔ پاکستانی بلڈ ڈورنرز ایسوسی ایشن نے قیام سے لیکر تاحال ایک درجن سے زائد ڈونیشن کیمپس کا انعقاد کر چکی ہے جس میں لوگوں کی کثیر تعداد نے اپنے خون کے عطیات دیے۔سفیر پاکستان سید سجاد حیدر نے تنظیم کی کاوش کو سراہا۔ انہوں نے کیمپ کا دورہ کیا اور ڈونرز سے ملاقات کی۔ انہوں نے کرونا وباء کی وجہ سے اپنائی گئی تمام حفاظتی تدابیر کو بے حد سراہا اور منتظمین کی تعریف کی۔ کیمپ پہنچنے پر سفیر پاکستان کا تنظیم کے کوفاونڈر احسان الحق، سینیئر ایڈوائزرعرفان سعید، پاک ڈونرز کویت چیپٹر کے ہیڈ نعمان اسلم گھمن، خواتین ونگ کی ہیڈ مسز شائستہ زاہد اور دیگر معززین نے استقبال کیا۔
کویت میں پاکستانی کمیونٹی کی جانی پہچانی شخصیت اور ایڈوائرز آصف خان نے سفیر پاکستان کو بتا یا کہ کویت میں پاکستانی کمیونٹی نیعطیہ خون کے حوالے سے اپنی نوعیت کی تاریخ رقم کی ہے اور پاکستانی کمیونٹی ہمہ وقت عطیہ خون کے لیے تیار رہتے ہیں۔

پاکستانی کمیونٹی کے معزز شخصیات نے کیمپ کا دورہ کیا اور تنظیم کی کارکردگی کو سراہا، جن میں اسلامک ایجوکیشن کمیٹی کے قائم مقام صدر محمد کمال، ڈاکٹر شجاع الدین، پیر امجد حسین، عرفان نون، اسامہ شاہد، ماجد علی چوہدری، محمد انعام، ارشد نعیم چوہدری، جاوید شاہ، رانا اعجاز، عرفان ناگرہ، ڈاکٹر بینا، ڈاکٹرفرح و دیگر شامل تھے۔
تقریب میں یوم آزادی کے مناسبت سے جشن آزادی کے کیک بھی کاٹا گیا۔ سفیر پاکستان نے پاک ڈونرز اور اسلامک ایجوکیشن کمیٹی (یوتھ ونگ) کی ٹیم کے ہمراہ کیک کاٹا۔ انہوں نے منتظمین کو کامیاب بلڈ ڈونیشن کے انعقاد پر مبارک باد دی جس سے پاکستانی کمیٹی کا مثبت پہلو اجاگر ہوا ہے۔ اس موقع پر تنظیم کے کوفاونڈر احسان الحق نے سفیر پاکستان کے سوئینیرپیش کیا۔


تنظیم کے چیئرمین محمد عارف بٹ نے ٹیم کو خصوصی طور پر کامیاب بلڈ ڈونیشن کے انعقاد پر مبارک باد دی۔ تنظیم کے ارکان میں عدنان جاوید (ایونٹ انچارج)، ساجد ندیم، شہباز احمدچغتائی، اسامہ امتیاز، الطاف حسین، حسن عابد، ملک مزمل، محمد اسد، سید شہریار، نوید اکبر، اسامہ جاوید، سید وقاص، شیخ حماد، محمد احسن چوہدری، عابد نعیم، خلیل چوہدری، محمد آکاش، ابرار شاہ، عبدالرحمن شہباز، عبدالصمد شہباز، یوسف شہباز، محمد افضل، عرفان امین، نثار بٹ، محمد اکبر، نعمان سعید، شہباز صابر، عمر حیات، محمد راحیل، رفاقت علی، زاہد اقبال، زاہد خادم اور محمد خالد شامل تھے جنہوں نے شب و روز کی انتھک محنت اور لگن سے کیمپ کو کامیاب بنایا۔پاک ڈونرز مستقبل میں بھی انشااللہ محنت و لگن اور انسانیت کی خدمت کے جذبے اور عطیہ خون کی آگاہی کی مناسبت سے

کمیونٹی میں اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.