gul nokhaiz akhter
Posted in Columns

بول مٹی دیا باویا۔۔۔۔کالم گل نوخیز اختر

رات کے بارہ بجے تھے‘ قبرستان کے اندر قدم رکھتے ہی شاہ صاحب نے منہ ہی منہ میں کچھ پڑھا پھر آہستہ سے سب کو…

Continue Reading...